میرےیار جیسا کوئی بے دردی نہیں ہےکسی کو بھی مجھ سے ہمدردی نہیں ہے
مجھےدوستوں نے کپتان نام تو دے دیا
مگر میرےتن پہ کوئی وردی نہیں ہے
وہ ہر بات پہ ڈانٹتے رہتے ہیں مجھے
کہتےہیں یہ پیار ہے غنڈہ گردی نہیں ہے
تیرےپیار کی حدّت ہے میرے من میں
اسی لیے میرےتن میں سردی نہیں ہے
اب اصغر سے ان کے مراسم نہیں رہے
اِسی لیے مجھے کوئی سردردی نہیں ہے